کراچی : پی ایس ایل 6 کی تحقیقات کیلیے فیکٹ فائنڈنگ پینل کا اعلان

کراچی ( سپورٹس رپورٹر ) پاکستان کرکٹ بورڈ نے پی ایس ایل 6 کی تحقیقات کے لیے فیکٹ فائنڈنگ پینل کا اعلان کردیا گیا۔ وبائی امراض کے ماہر ڈاکٹر سید فیصل محمود اور  ڈاکٹر سلمہ محمد عباس پر مشتمل 2 رکنی فیکٹ فائنڈنگ پینل مقررہ بائیو سیکیور پروٹوکولز اور ضمنی قوانین کا ازسرنو جائزہ لے گا۔ ڈاکٹر سید فیصل محمود آغا خان یونیورسٹی میں شعبہ وبائی امراض میں بطورسیکشن ہیڈ اور اسسٹنٹ پروفیسر ذمہ داریاں نبھارہے ہیں۔ ڈاکٹر سلمہ محمد عباس شوکت خانم میموریل کینسر ہسپتال اور ریسرچ سنٹر لاہور میں بطور کنسلٹنٹ برائے وبائی امراض اینڈ جنرل میڈیسن  کی حیثیت سے فرائض انجام دے رہی ہیں۔ یہ پینل 31 مارچ تک اپنی سفارشات اور تجاویز چیئرمین پی سی بی احسان مانی کو پیش کرے گا۔ اس آزاد پینل کی ذمہ داری ہوگی کہ وہ پی ایس ایل 6 کے لیے تیار کردہ کورونا  ایس او پیز کا ایک جامع اور تفصیلی جائزہ لینے  کے بعد  وہاں موجود کسی بھی خامی کی نشاندہی کرے  اور اپنی سفارشات پیش کرے کہ یہ بائیو سیکیور ماحول کورونا  فری کیوں نہ رہ سکا۔ پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیئرمین احسان مانی کا کہنا ہے کہ پی سی بی اپنے کھلاڑیوں، اسپورٹ اسٹاف اور اپنے میچ آفیشلز کی صحت اور حفاظت سے متعلق بہت سنجیدہ ہے، ہم زمبابوے اور جنوبی افریقہ کے خلاف ہوم سیریز اور حالیہ ڈومیسٹک سیزن کے 9 ٹورنامنٹس میں اس کا عملی مظاہرہ بھی کرچکے ہیں۔ اس میں نیشنل ٹی ٹونٹی کپ، قائداعظم ٹرافی اور پاکستان کپ بھی شامل ہیں۔ چیئرمین پی سی بی نے کہا کہ دو ماہرین پر مشتمل اس آزاد پینل کی تقرری کا واحد مقصد ایک ایماندارانہ، تعمیری اور بامقصد جائزہ لینا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ یہ آزاد پینل ایونٹ اور ہوٹل کے عملے، میڈیکل اینڈ کمپلائنز افسران، ٹیموں کے کھلاڑیوں اور منیجمنٹ سمیت  تمام متعلقہ اسٹیک ہولڈرز سے رابطہ قائم کرے گا تاکہ ہمیں بہتر اندازہ ہوسکے کہ یہ کیسز کیسے سامنے آئے، اس  تفصیلی جائزے کے بعد یہ آزاد پینل  اپنی سفارشات ہمیں پیش کرے گا۔ ڈاکٹر سید فیصل محمود: سال 2002 میں امریکی بورڈ برائے وبائی امراض میں بطور ڈیپلومیٹ سال 1997 میں دی آغا خان یونیورسٹی سے ایم بی بی ایس سال 2004 میں امریکی بورڈ برائے انٹرنل میڈیسن اسسٹنٹ پروفیسراینڈ سیکشن ہیڈبرائے وبائی امراض، دی آغا خان یونیورسٹی سربراہ کنٹرول کمیٹی برائے وبائی امراض، دی آغاخان یونیورسٹی ڈاکٹر سلمہ محمد عباس: سال 2018ایم پی ایچ (امریکہ) سال 2017 میں امریکی بورڈ برائے وبائی امراض میں بطور ڈیپلومیٹ سال 2015 میں امریکی بورڈ برائے انٹرنل میڈیسن سال 2010 میں دی آغا خان یونیورسٹی سے ایم بی بی ایس

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں