ترکی،قونیا میں علامہ اقبال کی اعزازی قبر۔۔۔۔!

تیرہویں صدی کے عظیم صوفی مولانا جلال الدین رومی کے مزار ( ترکی کے شہر قونیا) کے احاطے میں علامہ محمد اقبال کی اعزازی قبر موجود ہے۔ علامہ محمد اقبال مولانا کو اپنا روحانی استاد مانتے تھے اور ان کی شاعری سے اس قدر متاثر تھے کہ آپ نے مولانا کی مثنوی کو فارسی میں قرآن کا ترجمہ کہا۔ علامہ محمد اقبال کے ساتھ ترکی کے لوگوں کی انسیت بھی مثالی ہے اور اسی وجہ سے ترکی کی حکومت نے 2016 میں علامہ اقبال کے پوتے ولید اقبال کو علامہ اقبال کی اسلام کے لیے خدمات کے اعتراف میں “دوست ایوارڈ” سے نوازا تھا۔
مولانا رومی کے مزار کے احاطہ میں ترکی کی حکومت نے میوزیم بھی تعمیر کر رکھا ہے جس میں مولانا کے زیر استعمال اشیاء سمیت تیرہویں صدی کے قرآن کریم کے نسخہ بھی موجود ہیں۔ مزار کے ایک حصہ میں خضور پاک (ص) کے موءے مبارک بھی موجود ہیں۔ اس مزار کے کھلے رہنے کے اوقات میں زبردست ہجوم رہتا ہے اور زیارت کرنے والوں میں مسلم و غیر مسلم سبھی شامل ہوتے ہیں۔

اس کے علاوہ قونیا میں علامہ اقبال کے نام سے ایک پارک بھی تعمیر کیا گیا ہے جو پاکستان و ترکی کے برادرانہ تعلقات کا عکاس ہے!

Konya

AllamaİqbalsGrave

Cenotaph

PakTurkFriendship

Rumi

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں