کیپٹن جنید حفیظ شہید Pride of 128 LC Pride of Pakistan❤️🇵🇰🦅

ستارہ بسالت
کیپٹن جنید حفیظ شہید 21 ستمبر 1993کوٹوبہ ٹیک سنگھ کے گاؤں 388ج۔ب میں پیدا ہوئے۔اپ کو بچپن سے ہی آرمی میں جانے کا شوق تھا۔اپ کی ایک بہن اور ایک بھائی ہے۔اپ گھر میں سب کی آنکھوں کا تارا تھے۔
اپ 18نومبر 2011کو پاک آرمی کے 128لانگ کورس میں شامل ہوئے۔PMAکی دو سالہ زندگی میں آپ کو بہت سے اعزازات سے نوازا گیا۔اپ عبیدہ کمپنی کےCSUOتھے۔اپ کو یہ اعزاز حاصل ہے کہ آپ کیپٹن کرنل شیر خان شہید کے کمرے میں رہے۔
آپ 12 اکتوبر 2013کو 20 پنجاب رجمنٹ میں کمیشن حاصل کیا۔اپ میں بہادری اور پیشہ ورانہ صلاحیتیں کوٹ کوٹ کر بھری ہوئی تھیں۔اپ ہمیشہ دوسروں کے کام اتے۔
آپ نے ضرب عضب اور کشمیر سیکٹر میں فرنٹ لائن پر دشمنوں کا مقابلہ کیا۔
2016 میں آپ نے SSGکورس میں شمولیت اختیار کی اور وہاں بہترین کارکردگی دکھاکر SSG Dragger حاصل کی۔اپ 1 لائٹ کمانڈو میں تعینات ہوئے ۔اپ کو Anti Terrorists پلاٹون کی قیادت سونپی گئی۔اپ نے اپنی تمام ذمہ داریاں بہت خوش اسلوبی سے انجام دیں۔اپ نے 170 سے زائد انٹیلی جنس آپریشن کیے۔اس کے علاؤہ اپنی یونٹ کے ساتھ بھی بہت سارے آپریشن میں حصہ لیا ۔
شہادت سے پہلے آخری بار تو بہن اس بات پر اصرار کر رہی تھی کہ چھٹی لے کر گھر آہیں۔کیو نکہ ہم نے آپ کی منگنی کرنی ہے۔
آپ 13 نومبر 2017کی رات باجوڑ ایجنسی میں آ پر یشن فصیل آ ہن 4 میں حصہ لیا اور دہشتگردوں سے مردانہ وار مقابلہ کرتے ہوئے جام شہادت نوش فرمایا۔
حکومت پاکستان نے آپ کی بہادری اور شجاعت کی بدولت آپ کو ستارہ بسالت ملٹری سے نوازا۔
آپ کو آپ کے آبائی گاؤں میں پورے فوجی اعزاز کے ساتھ دفنایا گیا۔
آپ کے والد آپ سے بہت پیار کرتے تھے۔وہ آپ کی جدائی کا صدمہ برداشت نہیں کر سکے اور آپ کی شہادت کے کچھ عرصے بعد اس دنیا سے رخصت ہو گئے۔

کیپٹن جنید حفیظ شہید
Pride of 128 LC
Pride of Pakistan❤️🇵🇰🦅
ستارہ بسالت
کیپٹن جنید حفیظ شہید 21 ستمبر 1993کوٹوبہ ٹیک سنگھ کے گاؤں 388ج۔ب میں پیدا ہوئے۔اپ کو بچپن سے ہی آرمی میں جانے کا شوق تھا۔اپ کی ایک بہن اور ایک بھائی ہے۔اپ گھر میں سب کی آنکھوں کا تارا تھے۔
اپ 18نومبر 2011کو پاک آرمی کے 128لانگ کورس میں شامل ہوئے۔PMAکی دو سالہ زندگی میں آپ کو بہت سے اعزازات سے نوازا گیا۔اپ عبیدہ کمپنی کےCSUOتھے۔اپ کو یہ اعزاز حاصل ہے کہ آپ کیپٹن کرنل شیر خان شہید کے کمرے میں رہے۔
آپ 12 اکتوبر 2013کو 20 پنجاب رجمنٹ میں کمیشن حاصل کیا۔اپ میں بہادری اور پیشہ ورانہ صلاحیتیں کوٹ کوٹ کر بھری ہوئی تھیں۔اپ ہمیشہ دوسروں کے کام اتے۔
آپ نے ضرب عضب اور کشمیر سیکٹر میں فرنٹ لائن پر دشمنوں کا مقابلہ کیا۔
2016 میں آپ نے SSGکورس میں شمولیت اختیار کی اور وہاں بہترین کارکردگی دکھاکر SSG Dragger حاصل کی۔اپ 1 لائٹ کمانڈو میں تعینات ہوئے ۔اپ کو Anti Terrorists پلاٹون کی قیادت سونپی گئی۔اپ نے اپنی تمام ذمہ داریاں بہت خوش اسلوبی سے انجام دیں۔اپ نے 170 سے زائد انٹیلی جنس آپریشن کیے۔اس کے علاؤہ اپنی یونٹ کے ساتھ بھی بہت سارے آپریشن میں حصہ لیا ۔
شہادت سے پہلے آخری بار تو بہن اس بات پر اصرار کر رہی تھی کہ چھٹی لے کر گھر آہیں۔کیو نکہ ہم نے آپ کی منگنی کرنی ہے۔
آپ 13 نومبر 2017کی رات باجوڑ ایجنسی میں آ پر یشن فصیل آ ہن 4 میں حصہ لیا اور دہشتگردوں سے مردانہ وار مقابلہ کرتے ہوئے جام شہادت نوش فرمایا۔
حکومت پاکستان نے آپ کی بہادری اور شجاعت کی بدولت آپ کو ستارہ بسالت ملٹری سے نوازا۔
آپ کو آپ کے آبائی گاؤں میں پورے فوجی اعزاز کے ساتھ دفنایا گیا۔
آپ کے والد آپ سے بہت پیار کرتے تھے۔وہ آپ کی جدائی کا صدمہ برداشت نہیں کر سکے اور آپ کی شہادت کے کچھ عرصے بعد اس دنیا سے رخصت ہو گئے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں