سی پیک آپریشنل،خطے اور پاکستان کی،خوشحالی کا سفر شروع:

ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل بابر افتخار نے کہا ھے کہ پاکستان نے ٹھوس ثبوتوں پر مشتمل اپنے ڈوزیر میں پاکستان میں دھشتگردی کی بھارتی سرپرستی کو بےنقاب کر دیا ہے۔۔۔

“پاکستان کے ڈوزیئر کے بعد اب پوری دنیا کھلے الفاظ میں بھارت کی پاکستان میں دہشت گردی کی سرپرستی کے بارے میں بات کر رہی ہے”۔۔۔

بھارت نے ایک اینٹی سی پیک دھشتگردی سیل بنایا ہے جو براہ راست بھارتی پی ایم مودی کو اپنی کارروائیوں کی اطلاع دیتا ہے اس سیل کو سی پیک کو نقصان پہنچانے کے لئے 500 ملین ڈالر کا ابتدائی بجٹ دیا گیا تھا۔۔۔

اس قدر خطیر فنڈ نے سی پیک اقتصادی راہداری کو نقصان پہنچانے کے لئے دھشتگرد عناصر کو 700 سے زیادہ جوانوں پر مشتمل ایک ملیشیاء بنانے میں مدد کی ہے۔۔۔

ڈی جی آئی ایس پی آر نے بتایا کہ “ہم نے پاکستان اور افغان سرحد کی لگ بھگ 83 فیصد باڑ مکمل کر لی ھے۔ اور ان شاءالله افغانستان کے ساتھ پوری سرحد پر باڑ لگانے کا کام اس ماہ کے آخر تک مکمل ہو جائے گا”۔۔۔

ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل بابر افتخار نے مزید کہا کہ سی پیک ہمارے خطے کے لئے ایک “گیم چینجر” منصوبہ ہے۔ “یہ پورے خطے میں تجارتی رابطہ کاری کا زریعہ بنے گا اور پاکستان اس رابطہ کاری کا مرکز بن جائے گا۔۔۔

ڈی جی آئی ایس پی آر نے مزید کہا ایک منصوبے کے طور پر سی پیک سے پاکستان اور خطے میں طویل مدتی اور تیز ترین خوشحالی اور ترقی ہو گی۔۔۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

الحمدلله سی پیک منصوبے کو توسیع دیتے ھوئے پاکستان نے چین کی رضامندی سے روس کو بھی گوادر بندرگارہ کے زریعے بین الاقوامی تجارت کی اجازت دے دی ھے۔ یہ فیصلہ منصوبے کی اھمیت بڑھنے کے ساتھ ساتھ پاکستان کے لیے ترقی و خوشحالی کی نئی راہیں بھی کھولے گا۔۔۔

سب سے بڑھ کر اب چونکہ روس بھی پاکستان اور چین کے ساتھ گوادر پورٹ اور سی پیک کا ایک فائدہ کار ملک بن گیا ھے اسلیے اب بھارت سی پیک کیخلاف اپنی ناپاک سازشیں کرتے وقت ضرور سوچے گا کہ چین پاکستان نیپال بھوٹان بنگلہ دیش سری لنکا ایران تو پہلے ہی بھارت سے دور ھو گئے اب اگر روس کو بھی ناراض کر دیا تو بھارت کو مزید مشکلات کا سامنا کرنا پڑے گا۔۔۔

لہذا اب چونکہ گوادر پورٹ سے چین اور روس کی تجارت کا سلسلہ الحمدلله شروع ھو چکا ھے اس لیے اب ان شاءاللہ دشمن کی تمام سازشیں ایک ایک کر کے ناکام ھوتی جائیں گی۔ سب سے اھم کہ پاک افغان سرحد پر حفاظتی باڑ کی تکمیل ھونے والی ھے۔ ایران بھی اب بھارتی دھشتگردی کی سہولت کاری سے ہاتھ کھینچ چکا ھے۔۔۔

ان شاءالله عزوجل اب پاکستان کا خوشحالی کا سفر شروع ھونے جا رہا ھے۔ عوام الناس سے اپیل ھے کہ اپنی افواج اور حکومت وقت کے ساتھ کھڑے ھوں، جو تین بار ملک کی حکمرانی کر کے ملک و قوم کی تقدیر نہ بدل سکے وہ پہلی بار حکومت کرنے والے عمران خان سے صرف دو سالوں میں تقدیر نہ بدل سکنے کے طعنے دے رہے ھیں ایسے مفاد پرست اقتدار و کرسی کے بھوکے سیاستدانوں سے دور رھئیے۔۔۔
تہذیب الحسن

🤺سفید داڑھی والے🤺
🏹⚔️اکبر⚔️🏹

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں